مفتی محمد عبدالشکوراعوان تحریر شوکت محمود اعوان

مفتی محمد عبدالشکوراعوان
تحریر شوکت محمود اعوان
مفتی محمد عبدالشکور اعوان( راولپنڈی) کےآباو¿ اجداد جبی شریف سےتعلق رکھتےہیں۔ ان کےبزرگ حافظ فتح محمد ایک ولی اللہ شخصیت ہو گزرےہیں۔ وہ جبی گاو¿ں سےاٹھ کر دامان ضلع ڈیرہ اسمعیل خان میں منتقل ہو گئی۔ وہاں ان کی اولاد موجود ہی۔ حافظ فتح محمد کی اولاد میں ان کےبیٹےخدا بخش اور آگےان کےبیٹےغلام محمد اور ان کےتین بیٹےغلام حسین، غلام صدیق اور غلام حیدر ہیں۔ غلام صدیق کےبیٹےمحمد رفیق صاحب ہیں۔ حافظ فتح محمد صاحب کےبارےمیں کئی روایات موجود ہیں اور تحقیق طلب ہیں۔ کہتےہیں کہ ان کےدور میں کسی سکھ نےکہا کہ مسلمان آذان نہ دیا کریں۔ اگر مسلمان آذان دیں گےتو ان کو گولی مار دی جائےگی۔ لیکن حافظ صاحب نےفرمایا کہ میں آذان بھی دوں گا اور انشاءاللہ مجھےگولی بھی نہیں لگےگی۔ کہتےہیں کہ سکھ نےگولی چلائی لیکن حافظ صاحب گولی سےمحفوظ رہی۔ البتہ حافظ صاحب نےبعد میں سکھ کو گولی سےاڑا دیا۔ اس موضوع پر فارسی زبان میں ایک کتاب موجود ہےجس میں یہ حالات درج ہیں۔ اگر یہ کتاب میسر آ جائےتو بہت سارےواقعات منظر عام پر آ سکتےہیں۔ ایک اور واقعہ بھی موجود ہےکہ سکھوں کےایک جرگہ میں جھگڑا ہو گیا۔ سکھ ایک جگہہ نہاتےتھےجہاں پر مسلمان پانی پیا کرتےتھی۔ مسلمانوں نےان کو نہانےسےمنع کیا۔لیکن وہ سکھ اس سےمنع نہ ہوئی۔ اس میں مسلمانوں نےاپنےجرگےمیں یہ فیصلہ کیا کہ سکھوں سےمقابلہ کیا جائے۔ اس پر ایک مسلمان کھڑا ہو گیا اور اس نےکہا کہ اگر میری خاندان میںدشمنی نہ ہوتی تو میں اس سکھ کو ختم کر دیتا جو اس جگہ پر نہائی۔ البتہ بعد میں جب وہاں پر ایک سکھ نہانےکےلئےآیا تو اسی شخص نےایک زور دار پتھر سےسکھ کو مارا اور اس کا بھیجا اڑا دیا۔ بعد میں سکھوں کی جرات نہ ہوئی کہ وہ مسلمانوں کےساتھ لڑ سکیں۔ اور اس طرح یہ جرات کا واقعہ مسلمانوں کےلئےکام آ گیا۔ حافظ فتح محمد کےایک بھائی عبدالرحیم مجذوب اور فقیر بھی تھی۔ ایک دفعہ انہوں نےایک سکھ کو مار دیا ۔تحقیق کی گئی تو معلوم ہواکہ سکھ کو مجذوب نےمارا ہی۔ سکھ مل کر آئےتو مجذوب نظر نہ آئی۔ اس طرح یہ معاملہ رفع دفع ہو گیا۔ حافظ فتح محمد کا مزار بھڑ رشید دامان ڈیرہ اسمعیل خان میں ہی۔ کروڑ ضلع لیہ تحصیل کروڑ لالی حسین میں ایک دربار بھی موجود ہی۔ کہتےہیں کہ کروڑ موسن شاہ اور قرب شاہ دو بھائی تھے۔دونوں نےگاو¿ں آباد کئی۔ موسش شاہ میں جاگیر سہیڑ برادری موجود ہی۔ دوسرےدرجےپراعوان ہیں البتہ کاغذات میں ان کو آوان لکھا گیا ہی۔ مولنا غلام سرور شہر بھکر میںمدرس ہیں۔ وہ مولوی اسحق صاحب کےچچا زاد بھائی ہیں۔ مولنا محمد ظریف اعوان بھی ان کےچچا زاد بھائی ہیں۔ یہ غلام حسین کی اولاد سےہیں۔ البتہ جبی گاو¿ںسےسادات اور اعوان شفٹ ہو کر لیہ پہنچےہیں۔ یہ مضمون نامکمل ہےاور تحقیق طلب ہے۔
شوکت محمود اعوان جنرل سیکرٹری ادارہ تحقیق الاعوان پاکستان۔ ادارہ افکار جبریل واہ کینٹ ادارہ تحقیق الاعوان پاکستان 03009847582


Print Friendly, PDF & Email

Attachments

Related Posts

  • 80
    وادی سون کی معروف روحانی شخصیات کا تذکرہ تحریر ملک محمد شیر اعوان وساوال ۔ کہتےہیں کہ قدرت جب کسی سےکوئی مخصوص کام لینا چاہتی ہی۔ تو اس کام کےلئےاسی قوم میںسےمخصوص افراد کو چن لیتی ہی۔ جو اس کام کی انجام دہی میں شب و روز ایک کر دیتےہیں۔…
  • 77
    محمد عارف کےحالات زندگی تحریر شوکت محمود اعوان واہ کینٹ نام محمدعارف ولدیت میاں محمد سال پیدائش 16 فروری 1969 مستقل پتہ گاو¿ں پنڈ فضل خان، تحصیل فتح جنگ، ضلع اٹک موجودہ پتہ I-R-36 ، نزد جنجوعہ ٹریڈرز، اعوان مارکیٹ فیصل شہید ٹیکسلا نمبر رابطہ 03335465984 تعلیمی کوائف:۔ ١۔ پرائمری…
  • 76
    ”چراغِ راہ“ تحریر : محمد عارف ٹیکسلا واصف علی واصف نےایک دفعہ کہا تھا کہ ” ہم زندگی بھر زندہ رہنےکےفارمولےسیکھتےرہتےہیں اور زندگی جب اندر سےختم ہو جاتی ہےتو ہم بےبس ہو جاتےہیں۔ کیونکہ ہم نےموت کا فارمولا سیکھا ہی نہیں ہوتا۔ اسلا م نےبامقصد زندگی کےساتھ بامقصد موت کا…
  • 73
    حطمہ کی اہمیت پر نقاط تحریر شوکت محمود اعوان 1962 ءمیں علامہ محمد یوسف جبریل کو قرآن حکیم میں حطمہ( ایٹمی سائنس اور قران حکیم )کےبارےمیں انکشاف ہوا ۔ حطمہ کےبارےمیں آقا نبی کریم اور صحابہ کرام کےارشادات موجود ہیں۔ بعد میں مفسرین کرام نےاس پر خصوصی تحقیق کی اور…
  • 69
    وادی سون سکیسر کی تاریخ اور ثقافت کا تحقیقی جائزہ : تحریر : شوکت محمود اعوان ملک محمد سرور اعوان وادی سون سکیسر نوشہرہ کی ایک مشہور و معروف شخصیت ہو گزری ہیں۔ وہ تحقیقی دنیا میں اعلیٰ شہرت رکھنےوالی شخصیت تھیں۔ملک صاحب نےاپنی ساری عمر علم و تعلم میں…
  • 68
    علامہ محمد یوسف جبریل ،وادی سون اور انگریز کی نوکری تحریر : شوکت محمود اعوان جب تک انگریز دنیا کی سپر پاور بن کر دنیا پر حکمرانی کرتےرہی۔ تو ان کی مقبوضات میں شامل ہندوستان کا ایک کوہستانی علاقہ بھی ان کی فوج کےلئےایندھن کا کام دیتا رہا۔ یہ پنجاب…
  • 68
    علامہ محمد یوسف جبریل ایک جائزہ تحریر محمد عارف علامہ یوسف جبریل کی زندگی پر بہت کچھ لکھاجاسکتا ہی۔ وہ سال ہاسال سےمسلمانان عالم کو بیدار کرنےمیں مصروف عمل رہی۔ وہ قرانی تعلیمات کی روشنی میں دنیاکو امن اور سلامتی کا پیغام دیتےرہےہیں۔ علامہ یوسف جبریل کی شخصیت نہایت عجیب…
  • 67
    ”ادب دےنگینے“ تحریر: محمد عارف (ٹیکسلا) میاں محمد اعظم کا تعلق راولپنڈی سےہےجسےشاعروں اور افسانہ نگاروں کا شہر کہا جاتا ہی۔ میاں محمد اعظم نے”ادب دےنگینی“ کےعنوان سےحال ہی میں ایک خوبصورت شعری مجموعہ زیورِ اشاعت سےآراستہ کیا ہی، جس کا انتساب” پروفیسر زہیر کنجاہی صاحب “کےنام ہےجو راولپنڈی کےمعروف…
  • 66
    ہر انسان کو اللہ تعالی نےکوئی نہ کو ئی خوبی عطا کی ہوتی ہےاور یہ کہ ہر انسان میں بہت سی پوشیدہ صلاحیتیں ہوتی ہیں ۔لیکن اگر بہت سی صلاحتیں اور خوبیاں ایک انسان میں یکجاہوجائیں تو یہ کمال حیرانی کی بات ہوتی ہےاگر انسان اپنےاندر پائی جانےوالی ان ایک…
  • 66
    Introduction of shaukat m awan gen. secretary adara tehqiqul awan pakistan President Yousuf Jibreel Foundation sarparast ala bazme afqare gabriel wah cantt editor coordinator weekly watan islamabad شوکت اعوان شخصیت اور خدمات تحریر محمد عارف ١۔ شوکت محمود اعوان گیارہ نومبر انیس سو ترپن 11-11-1953میں بمقام کھبیکی وادی سون سکیسر…
  • 66
    بسم اللہ الرحمن الرحیم اللھم صلی علی محمد و علی آلہ و اصحابہ و اھل بیتہ و ازواجہ و ذریتہ اجمعین برحمتک یا الرحم الرحمین o توحید اور تولید قرآن و سنت کی روشنی میں (ایک تقابلی جائزہ ) پیش لفظ ان صفحات میں ایک حقیر اور ادنیٰ سی کوشش…
  • 64
    ”حالِ فقیر“ (محمد عارف ٹیکسلا) گروپ کیپٹن(ر) شہزاد منیر سےٹیلی فون پر رابطہ ہوا۔ تو وہ مجھےپہلےسےہی جانتےتھی۔ میں نےانہیں اپنی اس خواہش سےآگاہ کیا کہ میں ڈاکٹر تصدق حسین کےبارےمیں کچھ خیالات کا اظہار کرنا چاہتا ہوں جنہیں ”حالِ فقیر “میں شامل کر لیا جائےتو میرےلئےسعادت کی بات ہو…
  • 63
    Back to Kuliyat e Gabriel سوز و نالہء جبریل (1) روحِ اقبال ہوں صورتِ جبریل آیا ہوں کاروانوں کے لئے جرسِ رحیل آیا ہوں غرقِ فرعوں کے لئے قلزم و نیل آیا ہوں فیلِِ ابرہ کے لئے ضربِ سجیل آیا ہوں تم کو پیغامِ محمد ﷺ کا سنانے کے لئے…
  • 63
    وادی سون سکیسر کی ایک عظیم ادبی شخصیت ۔ ملک خدابخش مسافر تحریر : ملک شوکت محمود اعوان وادی سون سکیسرنےبےشمار ادیب، شاعر، عالم، فاضل، مفسر، مقرر، دیندار،سائنس دان، فلسفی، ولی اللہ،مجاہد،فوجی افسر اور فوجی جوان، ٹیچر، زاہد، عابد اور علمائےکرام کو جنم دیا ہی، ان میں ہم جس شخصیت…
  • 63
    مختصر تعارف علامہ محمد یوسف جبریل 17فروری 1917ءکو وادی سون سکیسر ضلع خوشاب میں ملک محمد خان کےگھر پیدا ہوئی۔ یہ وہی تاریخ بنتی ہےجس تاریخ کو بائیبل کےمطابق طوفان نوح آیاتھا ۔اس دور کو بھی ایک طوفان دیکھنا تھا مگر مختلف قسم کا ۔ طوفان نوح آبی تھا مگر…
  • 63
    واہ قدیم شہر ٹیکسلا کےسنگم پر واقع ہی۔ ازمنہءقدیم میں ٹیکسلا گندھارا تہذیب کی راجدھانی رہا ہی۔ دور دراز سےتجارتی قافلےآتی، یہاں پر پڑاوکرتےاور اہل ہنر و صاحبان سیف و قلیم کا بھی یہاں پر اجتماع رہتا۔ ایک زمانےمیں علم و ہنر کےحوالےسےٹیکسلا کا پورےعالم میں ڈنکا بجتا تھا اور…
  • 63
    Back to Kuliyat e Gabriel پیشِ لفظ شاعری قطعاً مقصود نہیں بلکہ بھٹی سے اُ ٹھتے ہوئے شعلوں سے لپکتی ہوئی چنگاریاں ہیں یا اندھیری رات میں متلاطم سمندر کی لہروں کی خوفناک صدائیں ہیں جوحال سے پیدا ہو کر مستقبل میں گُم ہوتی نظر آتی ہیں اور جس طرح…
  • 61
    حج دا سفر نامہ تحریر: محمدعارف (ٹیکسلا) ڈاکٹر سید عبداللہ ”سرزمینِ حافظ و خیام از مقبول بیگ بدخشانی “ میں رقم طراز ہیں کہ ” ایک کامیاب سفر نامہ وہ ہوتا ہےجو صرف ساکت و جامد فطرت کا عکاس نہ ہو بلکہ لمحہءرواں میں آنکھ، کان ، زبان اوراحساس سےٹکرانےوالی…
  • 61
    قران حکیم کی ایک عظیم پیشین گوئی ایٹم بم تحریر پروفیسر ڈاکٹر فضل احمد افضل حضرت مسیح موعود کا ایک شعر ہی یا الہیٰ تیرا فرقان ہےکہ اک عالم ہی جو ضروری تھا وہ سب اس میں مہیا نکلا یہ شعر قرآن حکیم کی جامع تفسیر ہی۔ دنیا کی ہر…
  • 59
    وادی سون کا قدرتی ماحول تحریر شوکت محمود اعوان وادی سون کا ماحول ایک قدرتی ماحول ہی۔ جہاں جنگل، پربت وادیاں، ندیاں، نالی، جھیلیں، درختوں کےجھنڈ، آبشاریں، لہلہاتی فصلیں، جنگلی جانور، جنگلی بوٹیاں موجود ہیں۔ یہاں پر جنگلی حیات بھی موجود ہےجو کہ قدرت کی صناعی کےحسین ترین مظاہر میں…

Share Your Thoughts

Make A comment

Leave a Reply

Subscribe By Email for Updates.